https://www.rayznewstv.com/

Share the Love


اسلام آباد: وفاقی کابینہ نے  سرکاری ملازمین کی تنخواہوں، پینشن میں دس فیصد اضافے کی منظوری دے دی۔ 

ایکسپریس نیوز کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت وفاقی کابینہ کا خصوصی اجلاس ہوا، جس میں وفاقی کابینہ نے سرکاری ملازمین کی تنخواہوں اور  پینشن میں 10 فیصد اضافے اور فنانس بل 2021 کی منظوری دے دی ہے، جب ک  کابینہ نے انٹرنیٹ پر ٹیکس کی تجویز مسترد کردی، اور موبائل فون پر ٹیکس بھی محدود کر دیا گیا۔

وزیراعظم کو بریفنگ دیتے ہوئے بتایا گیا کہ بجٹ میں احساس پروگرام کے بجٹ میں اضافہ کیا جارہا ہے، بجلی اور خوراک کے شعبے میں سبسڈی بڑھائی جارہی ہے، اور کامیاب جوان پروگرام اور ہاوسنگ منصوبوں کے لیے گرانٹس میں اضافہ کیا جارہا ہے۔
اجلاس میں وفاقی وزیر اسد عمر نے بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ آئندہ مالی سال کے ترقیاتی بجٹ میں36 فیصد اضافہ کیا گیا ہے، اور آئندہ سال ترقیاتی بجٹ میں 2 ہزار 102 ارب روپے رکھے جائیں گے، وفاقی ترقیاتی بجٹ کا حجم 900 ارب اور  صوبوں کا ترقیاتی بجٹ 867 ارب سے بڑھاکر 1 ہزار 202 ارب روپے رکھا گیا ہے، پنجاب کے سرکاری ترقیاتی منصوبوں کیلئے 500 ارب، سندھ کیلئے 321 ارب، خیبرپختونخوا کے ترقیاتی منصوبوں کیلئے 248 اور بلوچستان کیلئے 133 ارب روپے رکھے گئے ہیں۔

اجلاس کو بتایا گیا کہ موٹر وے، ہائی وے، بین الصوبائی شاہراؤں، ائیر پورٹس اور ریلوے پروجیکٹس کیلئے 244 ارب روپے رکھے گئے ہیں، خیبرپاس اکنامک کوریڈور پروجیکٹ کے لئےساڑھے8ارب، گوادرایئرپورٹ کی تعمیر کے لئے 1 ارب 10کروڑ، ریلوے مین لائن ایم ایل ون کے لئے 6 ارب 20 کروڑ روپے رکھنے کی تجویز ہے، دیامر بھاشہ، مہمند اور داسو ڈیم کے لئے ساڑھے 84 ارب روپے رکھے جائیں گے، جب کہ 78 ارب سی پیک ٹرانسپورٹ اور کمیونیکیشن کے منصوبوں،7 ارب رشہ کئی، فیصل آباد،  بوستان اسپیشل اکنامک زونز کیلئے رکھے جائیں گے۔

 

ISLAMABAD: The federal cabinet has approved a 10 percent increase in salaries and pensions of government employees.

According to Express News, a special meeting of the Federal Cabinet was held under the chairmanship of Prime Minister Imran Khan, in which the Federal Cabinet approved 10% increase in salaries and pensions of government employees and Finance Bill 2021, while the Cabinet proposed tax on internet. Rejected, and tax on mobile phones was also limited.

Briefing the Prime Minister, it was informed that the budget for the Ehsas program is being increased, subsidies in the power and food sectors are being increased, and grants for successful youth programs and housing projects are being increased.
Briefing the meeting, Federal Minister Asad Umar said that the development budget for the next financial year has been increased by 36 percent and Rs 2,102 billion will be set aside in the development budget next year. The volume of the federal development budget is 900 billion and the provinces. The development budget has been increased from Rs 867 billion to Rs 1,202 billion, Rs 500 billion for government development projects in Punjab, Rs 321 billion for Sindh, Rs 248 billion for Khyber Pakhtunkhwa and Rs 133 billion for Balochistan.

The meeting was informed that Rs. 244 billion has been earmarked for motorways, highways, inter-provincial highways, airports and railway projects, Rs. 8.5 billion for Khyber Pakhtunkhwa Economic Corridor project, Rs. It is proposed to set aside Rs. 6 billion 20 crore for Diamer Bhasha, Mohmand and Dasu dams. Rs. 84 billion will be set aside, while Rs. 78 billion will be set aside for C-Pack transport and communication projects, Rs. Will be kept for special economic zones.

Share the Love


Source
You Might Also Like
Comments By User
Add Your Comment
Your comment must be minimum 30 and maximum 200 charachters.
Your comment must be held for moderation.
If you are adding link in comment, Kindly add below link into your Blog/Website and add Verification Link. Else link will be removed from comment.