https://www.rayznewstv.com/

Share the Love


نیویارک: سائنس سے اب ثابت ہوا ہے کہ ذہنی تناؤ سے بالوں کے سفید ہونے کا عمل بہت تیز ہوجاتا ہے لیکن اچھی خبر یہ ہے کہ تناؤ کم کرکے بالوں کو تیزی سے بوڑھا ہونے سے روکا جاسکتا ہے۔

کولمبیا یونیورسٹی کے ویگی لوس کالج آف فزیشن اینڈ سرجن سے وابستہ ماہرین نے پہلی مرتبہ بہت بڑی تعداد کے ثبوت پیش کئے ہیں جو نفسیاتی تناؤ اور بالوں کے سفیدی کا تعلق بیان کرتے ہیں۔ لیکن سائنسداں یہ جان کر حیران رہ گئے کہ جیسے ہی تناؤ کم ہوتا ہے تو بالوں کی سیاہی لوٹ آتی ہے۔ 

یہ تحقیق 22 جون کو ای لائف نامی ریسرچ جرنل میں شائع ہوئی ہے جس سے یہ تصور زائل ہوتا ہے کہ تناؤ سے سفید ہونے والے بال دوبارہ سیاہ نہیں ہوسکتے۔ یہ تحقیق کولمبیا یونیورسٹی کے نفسیات داں، مارٹِن پیکارڈ اور ان کے ساتھیوں نے کی ہے۔ ’پرانے سفید یا بھورے بالوں کو دوبارہ ’جوان‘ رنگت (پگمنٹ) کے درجے تک لوٹانے کے نئے ثبوت ملے ہیں جس سے بالوں کی سفیدی دور کرنے اور دماغی تناؤ کو سمجھنے میں مدد مل سکے گی۔‘
اس تحقیق سے معلوم ہوا ہے کہ انسانی عمر رسیدگی کوئی ناقابلِ تلافی یا جامد حیاتیاتی عمل نہیں بلکہ اسے روکا یا وقتی طور پر پلٹایا جاسکتا ہے۔ جب بالوں کی جڑ(فولیکل) کھال کے نیچے ہوتی ہے تو نفسیاتی دباؤ کے ہارمون اس پر اثرڈالتے ہیں اور یہ عمل مستقل ہوجاتا ہے اور سفید بال ہی نمودار ہوتے رہتے ہیں۔

اسے مزید سمجھنے کے لیے تحقیق میں شامل سائنسداں ، ایلیٹ روزنبرگ نے بالوں کے افقی اور عمودی ٹکڑے کئے ہیں جسے سلائسنگ کہتے ہیں۔ پھر ان ٹکڑوں کا تفصیلی مطالعہ کرکے ان کے سفید ہونے کا عمل نوٹ کیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ ہر ٹکڑے کی لمبائی ایک ملی میٹر کے بیسویں حصے کے برابر تھی یعنی ایک گھنے میں ایک بال اوسطاً اتنا ہی بڑھتا ہے۔ اس طرح کل 14 رضاکاروں کے بال جمع کئے گئے اور ان سے دماغی تناؤ کے بارے میں بھی پوچھا گیا۔ ہر رضاکار سے دن اور ہفتے میں تناؤ کی شرح کو مختلف پیمانوں سے بھی ناپا گیا ہے اور انہیں ایک ڈائری میں درج کرنے کو کہا۔

اس دوران انکشاف ہوا کہ بعض افراد کے سفید بال دوبارہ اصل رنگت کی جانب لوٹ آئے اور جب تناؤ کی ڈائری سے اس کا موازنہ کیا گیا تو معلوم ہوا کہ اس عرصے میں وہ ذہنی تناؤ کے کم تردرجے کے شکار تھے۔ اس کے علاوہ پانچ رضاکار ایسے تھے جو چھٹیوں پر تھے اور آرام کررہے تھے۔ اس دوران تناؤ کم ہونے سے ان کے سر کے جو بال اگے وہ سفید کی بجائے اصل رنگت کے برآمد ہوئے۔

 

New York: Science has now shown that stress can speed up the process of graying hair, but the good news is that reducing stress can prevent premature hair growth.

For the first time, experts from Columbia University's Vega Los College of Physicians and Surgeons have presented a large amount of evidence linking psychological stress and gray hair. But scientists were surprised to learn that as soon as the stress subsided, the hair ink returned.

The study, published in the June 22 issue of the research journal E-Life, dispels the notion that hair that has turned white from stress cannot turn black again. The study was conducted by Columbia University psychologist Martin Packard and colleagues. "There is new evidence that old white or brown hair can be rejuvenated to the level of 'young' pigmentation, which will help to remove gray hair and understand stress."
This study shows that human aging is not an irreversible or static biological process, but can be prevented or reversed temporarily. When the hair follicle is under the skin, stress hormones affect it and this process becomes permanent and only white hairs appear.

To further understand this, the scientists involved in the research, Elliott Rosenberg, have made horizontal and vertical pieces of hair called slicing. After a detailed study of these pieces, the process of their whiteness has been noted. Note that the length of each piece was equal to one twentieth of a millimeter, that is, one hair in a cube grows on average. Thus, a total of 14 volunteers' hair was collected and they were also asked about mental stress. Each volunteer was also asked to measure the stress rate on different scales during the day and week and record them in a diary.

During this time, it was revealed that some people's white hair had returned to its original color, and when compared to the stress diary, it was found that they were suffering from low levels of stress during this period. In addition, there were five volunteers who were on vacation and resting. As the tension subsided, the hairs on his head turned out to be the original color, not white.

Share the Love


Source
You Might Also Like
Comments By User
Add Your Comment
Your comment must be minimum 30 and maximum 200 charachters.
Your comment must be held for moderation.
If you are adding link in comment, Kindly add below link into your Blog/Website and add Verification Link. Else link will be removed from comment.