https://www.rayznewstv.com/

Share the Love


ہریانہ میں ہندو انتہاپسندوں نے مسلمان نوجوانوں پر بہیمانہ تشدد کیا جس کے نتیجے میں ایک نوجوان جاں بحق ہوگیا۔

کشمیر میڈیا سروس کے مطابق ریاست ہریانہ میں ہندو انتہاپسندوں نے 3 مسلمان نوجوانوں کو بدترین تشدد کا نشانہ بنایا اور جے شری رام کا نعرے لگانے پر زور دیتے رہے تاہم انتہاپسندوں کے بہیمانہ تشدد کے باعث آصف خان نامی نوجوان جاں بحق ہوگیا۔


 
آصف خان جم ٹرینر ہے جو اپنے دوستوں کے ساتھ دوائی لینے جارہاتھا کہ راستے میں 15 کے قریب انتہا پسندوں نے گاڑی کو روکا اور کار کے شیشہ پر پتھر مارے، انتہا پسندوں کے ہجوم نے آصف کے ساتھ گاڑی میں سوار اس کے 2 دوستوں واصف اور راشد کو بھی بدترین تشدد کا نشانہ بنایا جس کے باعث راشد اسپتال کے انتہائی نگہداشت میں زیر علاج ہے۔
اس خبر کو بھی پڑھیں : بھارت میں انتہاپسند ہندوؤں کا مسلمان نوجوانوں پر بہیمانہ تشدد

آصف خان کے رشتہ داروں کے مطابق آصف کے دونوں دوست مشتعل ہجوم سے بھاگ کر جان  بچانے میں کامیاب ہوگئے تاہم انتہاپسندوں نے آصف کو مار کر لاش کو گاؤں کے قریب پھینک دیا۔ دوسری جانب واقعہ کے بعد ابھی تک کوئی بھی گرفتاری عمل میں نہیں آئی ہے۔

واضح رہے کہ بھارت میں ہندو انتہا پسندی اور مسلمانوں کے خلاف نفرت انگیز واقعات میں آئے دن اضافہ دیکھنے میں آرہا ہے، اس سے قبل بھی متعدد بار مشتعل انتہاپسند ہجوم کی جانب سے مسلمانوں کو تشدد کا نشانہ بنایا گیا ہے جس میں متعدد افراد جان کی بازی ہار گئے ہیں۔

 

In Haryana, Hindu extremists brutally tortured Muslim youth, killing one.

According to Kashmir Media Service, in the state of Haryana, Hindu extremists subjected 3 Muslim youths to the worst kind of torture and insisted on chanting slogans of J. Shri Ram.


 
Asif Khan is a gym trainer who was going to take medicine with his friends when on the way about 15 extremists stopped the car and threw stones at the car window. The mob of extremists got into the car with Asif and his 2 friends Wasif and Rashid was also subjected to the worst kind of torture due to which Rashid is undergoing intensive care at the hospital.
Also read this story: Extremist Hindus in India brutally torture Muslim youth

According to Asif Khan's relatives, Asif's two friends managed to escape from the angry mob but the extremists killed Asif and dumped his body near the village. No arrests have been made since the incident.

It is to be noted that Hindu extremism and hate incidents against Muslims are on the rise in India. Even before this, Muslims have been tortured by angry extremist mobs several times in which several people have been killed. Dispersions are lost.

Share the Love


Source
You Might Also Like
Comments By User
Add Your Comment
Your comment must be minimum 30 and maximum 200 charachters.
Your comment must be held for moderation.
If you are adding link in comment, Kindly add below link into your Blog/Website and add Verification Link. Else link will be removed from comment.